جمعرات , 23 مئی 2019

مجھے لگا کہ پاکستانی ریڈار بادلوں کی وجہ سے بھارتی جہاز نہیں دیکھ سکے گا اس لیے حملے کی اجازت دی،نریندرمودی

بھارتی وزیراعظم نریندرمودی نے ایک انٹر ویو کے دوران کہا ہے کہ انہیں لگا کہ پاکستانی ریڈار بادلوں کی وجہ سے بھارتی جہاز نہیں دیکھ سکے گا اس لیے انہوں نے بھارتی فضائیہ کو پاکستان پر حملے کی اجازت دی. نریندر مودی نے انٹر ویو کے دوران کہاکہ 26مئی کی رات بالاکوٹ حملے کے وقت موسم اچانک خراب ہو گیا تھا اور انہوں نے اس حوالے سے منصوبے کو 9بجے رویو کیا اور پھر 12بجے بھی رویو کیا، بارش کی وجہ سے موسم شدید خراب تھا اور انہیں ماہرین نے مشورہ دیا کہ اس حملے کو موخر کر دیا جائے لیکن انہوں نے سوچا کہ موسم بھارتی فضائیہ کی مدد کرے گا اور پاکستانی ریڈار بادلوں کی وجہ سے بھارتی جہاز نہیں دیکھ سکے گا.اس مضحکہ خیزانٹر ویو پر سوشل میڈیا صارفین نے نریندر مودی کو آڑے ہاتھوں لے لیا ہے ٹویٹر پر ’انٹائر کلاؤڈ کور‘ کے نام سے ٹرینڈ بھی چلایا جا رہا ہے. بھارتی وزیراعظم کے اس انٹرویو کی کلپ کو بی جے پی کے کئی رہنماؤں نے شئیر کیا تھا لیکن شدید تنقید کے بعد بھارتی جنتا پارٹی نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ سے ٹویٹ ہٹا لی ہے جس پر تنقید کرتے ہوئے مقبوضہ کشمیر کے مسلمان سیاستدان عمر عبداللہ نے ٹویٹ کیا ہے کہ ’لگتا ہے ٹویٹ بادلوں میں کھو گئی‘. عمرعبداللہ نے ایک اور طنزیہ ٹویٹ میں کہا کہ ’یاد رکھا جائے کہ پاکستانی ریڈاربادلوں میں سے جہاز کا پتا نہیں چلا سکتے اور اس اہم معلومات کو اگلے حملے کے وقت استعمال کیا جائے.‘
Omar Abdullah

@OmarAbdullah
Pakistani radar doesn’t penetrate clouds. This is an important piece of tactical information that will be critical when planning future air strikes. https://twitter.com/bjp4gujarat/status/1127228877678321664 …

7,602
11:20 AM – May 11, 2019
Twitter Ads info and privacy
2,273 people are talking about this
کمیونسٹ پارٹی کے اہم رہنما سیتا رام یچوری نے ٹویٹر پیغام میں کہا کہ ’مودی کے الفاظ صحیح معنوں میں شرمناک ہیں، سب سے بڑی بات یہ ہے کہ وہ الفاظ ہماری فضائیہ کی بے عزتی ہیں کہ وہ ناواقف اور غیر پیشہ ور ہے. ‘ انہوں نے لکھا کہ ’ان الفاظ کا مطلب تو یہ ہے کہ حقیقت تو یہ ہے کہ وہ جو باتیں کر رہے ہیں وہ اپنے آپ میں ملک مخالف ہے. کوئی بھی وطن پرست ایسا نہیں کرے گا.‘

View image on Twitter
View image on Twitter

Sitaram Yechury

@SitaramYechury
Modi’s words are truly shameful. Most importantly, because they insult our Air Force as being ignorant and unprofessional. The fact that he is talking about all this is itself anti-national; no patriot would do this.

4,702
10:41 AM – May 11, 2019
2,037 people are talking about this
Twitter Ads info and privacy
بھارت میں مسلمانوں کے معروف رہنما اسد الدین اویسی نے ٹویٹر پیغام میں لکھا کہ ’سر، سر آپ تو غضب کے ایکسپرٹ ہیں. سر گذارش ہے کہ اپنے نام سے چوکیدار ہٹا دیجیے اور ایئر چیف مارشل اور پردھان لکھیے. آپ کیا ٹونک پیتے ہیں،؟آپ کے بٹوے میں ہر شعبے کا فارمولا ہے سوائے جاب، معیشت، صنعتی ترقی، زراعت کے مسائل کے.‘

Asaduddin Owaisi

@asadowaisi
Sir Sir @PMOIndia aapto ghazab ke Expert hain ,sir request hai CHOWKIDAR remove kardijiye aur Air Chief Marshal & Pradhan ……Kya tonic peeta hain aapke Batwa mein har department Ka FORMULA hai except Jobs,Economy,Industrial Growth,Agrarian problems (keep it up Mitro) https://twitter.com/bjp4gujarat/status/1127228877678321664 …

3,118
9:59 AM – May 11, 2019
Twitter Ads info and privacy
1,099 people are talking about this
بھارت میں مسلمانوں کے معروف رہنما اسد الدین اویسی نے ٹویٹر پیغام میں لکھا کہ ’سر، سر آپ تو غضب کے ایکسپرٹ ہیں. سر گذارش ہے کہ اپنے نام سے چوکیدار ہٹا دیجیے اور ایئر چیف مارشل اور پردھان لکھیے. آپ کیا ٹونک پیتے ہیں،؟آپ کے بٹوے میں ہر شعبے کا فارمولا ہے سوائے جاب، معیشت، صنعتی ترقی، زراعت کے مسائل کے.‘

Asaduddin Owaisi

@asadowaisi
Sir Sir @PMOIndia aapto ghazab ke Expert hain ,sir request hai CHOWKIDAR remove kardijiye aur Air Chief Marshal & Pradhan ……Kya tonic peeta hain aapke Batwa mein har department Ka FORMULA hai except Jobs,Economy,Industrial Growth,Agrarian problems (keep it up Mitro) https://twitter.com/bjp4gujarat/status/1127228877678321664 …

3,118
9:59 AM – May 11, 2019
Twitter Ads info and privacy
1,099 people are talking about this
اس کے علاوہ وٹس ایپ پہ ایک شعر بھی مشہور ہو رہا ہے جس میں نریندر مودی کو مرزا کلاؤڈی بنا کر پیش کیا جا رہا ہے.

This post has been Liked 2 time(s) & Disliked 0 time(s)

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے