اتوار , 26 مئی 2019

گیس کی بندش سے برآمدات کو سنگین خطرات لاحق

کراچی:  کراچی کی صنعتوں کو گیس کی سپلائی معطل کر کے 52 فیصد برآمدات کو متاثر کیا جارہا ہے گیس کی فراہمی میں برآمدی صنعتوں کو ترجیح نہ دینے کی صورت میں ملکی برآمدات کو سنگین خطرات لاحق ہوگئے ہیں۔

پاکستان ہوزری مینوفیکچررز اینڈ ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن کے سینٹرل چیئرمین جاوید بلوانی نے حکومت کو مطالبہ کیا ہے آئین کی پاسداری کرتے ہوئے گیس کی پیداوار کے حامل صوبے کی ضروریات ترجیحی بنیادوں پر پوری کرے۔

جاوید بلوانی نے کہا کہ صرف کراچی کی صنعتوں کا مجموعی برآمدات میں 52 فیصد حصہ ہے اوریہاں کی صنعتوں کو گیس فراہم نہ کرنے کا مطلب 52 فیصد ملکی ایکسپورٹ کو متاثر کرناہے۔

واضح رہے کہ کراچی میں گزشتہ کئی سال سے صنعتوں کے لیے ہفتہ وار گیس کی بندش نے عدم اطمینان کی فضا پیدا کردی ہے۔

This post has been Liked 0 time(s) & Disliked 0 time(s)

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے