جمعرات , 21 مارچ 2019

اسٹاک مارکیٹ میں تیزی برقرار.

کراچی: متحدہ عرب امارات کے اعلان کردہ پیکیج کے بعد سے خریداری میں تسلسل,پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں دوسرے دن بھی تیزی کا تسلسل قائم رہا۔

متحدہ عرب امارات کے اعلان کردہ پیکیج کے بعد سے خریداری میں تسلسل اور حکومت کی جانب سے فرنس آئل کی درآمدات پر پابندی کے بعد ریفائنری سیکٹرمیں وسیع پیمانے پر خریداری سرگرمیوں کے باعث پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں منگل کو دوسرے دن بھی تیزی کا تسلسل قائم رہا۔

جس سے انڈیکس کی39000پوائنٹس کی نفسیاتی حد بھی بحال ہو گئی۔ تیزی کے سبب 65.66 فیصد حصص کی قیمتیں بڑھ گئیں جبکہ حصص کی مالیت میں مزید 63ارب 36کروڑ 81 لاکھ 47 ہزار 224 روپے کا اضافہ ہوگیا۔ ماہرین اسٹاک کا کہنا تھاکہ وفاقی حکومت کی جانب سے کے الیکٹرک کو ابراج کے شئیرز چینی کمپنی کو فروخت کرنے کی اجازت دینے کی خبروں نے بھی کیپیٹل مارکیٹ پر مثبت اثرات مرتب کیے، یہی وجہ ہے کہ کاروبارکے تمام دورانیے میں مارکیٹ مثبت زون میں ہی رہی اور ایک موقع پر587پوائنٹس تک کی تیزی بھی آئی لیکن اختتامی لمحات میں پرافٹ ٹیکنگ کی وجہ سے تیزی کی شرح میں قدرے کمی واقع ہوئی۔

جس کے نتیجے میں کاروبار کے اختتام پرکے ایس ای 100 انڈیکس 490.10 پوائنٹس کے اضافے سے 39052.50 ہو گیا جبکہ کے ایس ای 30 انڈیکس 296.18 پوائنٹس کے اضافے سے 18505.41، کے ایم آئی 30 انڈیکس 1402.87 پوائنٹس کے اضافے سے 65839.70 اور پی ایس ایکس کے ایم آئی انڈیکس 314.71 پوائنٹس کے اضافے سے19017.17 ہوگیا۔ کاروباری حجم پیرکی نسبت 6.16 فیصد زائد رہا اور مجموعی طور پر 16 کروڑ 67لاکھ 90 ہزار 720حصص کے سودے ہوئے جبکہ کاروباری سرگرمیوں کادائرہ کار367کمپنیوں کے حصص تک محدود رہا جن میں 241کے بھاؤ میں اضافہ 103کے داموں میں کمی اور23کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے