اتوار , 17 نومبر 2019

ورلڈ کپ میں خاص کارکردگی نہ دکھانے والے حفیظ اپنی ایک گیند کی بدولت خبروں کی زینت بن گئے

ورلڈ کپ میں بنگلہ دیش کے خلاف میچ میں محمد حفیظ بیٹنگ اور بالنگ دونوں میں ہی کچھ خاص کارکردگی نہ دکھا سکے لیکن اس کے باوجود اپنی ایک گیند کی بدولت خبروں کی زینت بن گئے۔محمد حفیظ ایک مرتبہ پھر بیٹنگ میں ناکامی سے دوچار ہوئے اور صرف 27رنز بنانے کے بعد مہدی حسن کو وکٹ دے بیٹھے۔بالنگ کی باری آئی تو آل رانڈر کوئی بھی وکٹ نہ لے سکے
اور اننگز کا پہلا اوور میڈن کرانے کے ساتھ مجموعی طور پر 6 اوورز میں 32رنز دیے تاہم ان کی بالنگ کے دوران ایک موقع ایسا آیا جس پر شائقین خوب محظوظ ہوئے۔پہلا اوور میڈن کرانے کے بعد جب حفیظ اپنا دوسرا اوور کرانے آئے تو اس اوور کی آخری گیند پر گیند ان کے ہاتھ سے نکل گئی اور کافی دیر فضا میں رہنے کے بعد بلے باز تک پہنچی۔اس کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ گیند تقریبا 3 سیکنڈ تک فضا میں رہی اور اس کے بعد بیٹسمین سومیا سرکار تک پہنچی جس کا انہوں نے بھرپور فائدہ اٹھایا اور زوردار شاٹ کے ذریعے گیند کو بانڈری کی راہ دکھا کر چوکا حاصل کیا۔اس گیند کو انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے بھی نوٹس کیا اور حفیظ کی اس گیند کے حوالے سے اپنی میشن پر مبنی ایک مزاحیہ ٹوئٹ کردی جس کے اوپر کیپشن لکھا گیا کہ ‘جب آپ کا کوچ آپ کو گیند فلائٹ کرنے کے لیے کہے’۔اس گیند کے حوالے سے لوگوں نے حفیظ کی بیٹنگ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اگر اس گیند پر حفیظ خود بیٹنگ کر رہے ہوتے تو وہ یہ شاٹ سیدھا ڈیپ مڈوکٹ پر کھڑے فیلڈر کے ہاتھوں میں پھینک دیتے۔یاد رہے کہ حفیظ ورلڈ کپ کے دوران کئی مواقعوں پر پارٹ ٹائم بالرز کے ہاتھوں آٹ ہوئے اور اکثر مواقعوں پر چھکے والی گیند پر ڈیپ مڈ وکٹ پر کھڑے فیلڈر کو سیدھا کیچ دے کر چلتے بنے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے