بدھ , 12 اگست 2020

پاکستانی ڈراموں میں مورتیوں کی نمائش اور بھگوان جیسے الفاظ استعمال کرنے پر پابندی عائد کی جائے،عوامی حلقے

عوامی حلقوں نے حکومت کو خبر دار کیا ہے کہ پاکستانی ڈراموں میں مورتیوں کی نمائش اور بھگوان جیسے الفاظ استعمال کرنے پر پابندی عائد کی جائے ۔ایسے ڈرامے ہماری نسل کو تباہ کرنے کے درپے ہیں۔گزشتہ روز ایڈووکیٹ حاجی بشیر نے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی ڈراموں میں مورتیوں کی نمائش کی جاتی ہے اورایسی نمائش سے بچوں پر برے اثرات مرتب ہو رہے ہیں
،دیگر انہوںنے یہ بھی کہا کہ ڈراموں میں بھگوان کا لفظ استعمال کیا جاتا ہے اور اس لفظ سے متعلق عموماء بچے اپنے والدین سے استفسار کرتے ہیں کہ بھگوان کس کو کہتے ہیں اور ایسے سوالات کا جواب کیسے دیا جائے ۔انہوںنے مزید کہا کہ حکومت کو اس سے متعلق نوٹس لینا چاہیے اور اگر ایسا نہ کیا گیا تو پھر عدالت کے دروازے پر ہی دستک دی جائے گی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے