بدھ , 12 اگست 2020

عالمی مارکیٹ میں خام تیل کی گرتی ہوئی قیمتیں، اوگرا نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کی سمری ارسال کردی

عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمتیں کم ہوتے ہی شہریوں نے بھی پٹرول کی قیمتوں میں کمی لانے کا مطالبہ کر دیا ہے۔اسی پر بات کرتے ہوئے شہریوں کا کہنا تھا کہ پٹرول کی قیمت کم از کم 80 روپے فی لیٹر ہونی چاہیئے۔اگر پٹرول کی قیمت کم ہو گی تو اس سے مہنگائی میں کمی آئے گی اور اس کی ہمیں بہت زیادہ ضرورت ہے ۔شہریوں کا کہنا تھا کہ حکومت کو شہریوں کا خیال کرنا چاہیئے اور پٹرول کی قیمتوں کو کم کرنا چاہیئے کیونکہ عوام کو اس سے ریلیف ملے گا۔
واضح رہے کہ آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے پیٹرولیم مصنوعات کے نرخوں میں کمی کے لیے تجویز پیٹرولیم ڈویژن کو ارسال کردی جس کے مطابق یکم مارچ سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 7 روپے 23 پیسے فی لٹر کمی کی سفارش کی گئی ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ پٹرول کی قیمت میں 5 روپے 89 پیسے فی لٹر، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 7 روپے 23 پیسے کمی کا امکان ہے۔ فی الوقت یہ اوگرا نے سمری ارسال کی ہے تاہم وزارت خزانہ قیمتوں میں کمی کے حوالے سے جلد فیصلہ کرے گی جب کہ قیمتوں کا اطلاق یکم مارچ سے ہوگا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے